ایک اور وعدہ وفا ۔۔۔!!! وزیراعظم ہاؤس کو یونیورسٹی بنانے کیلئے پروجیکٹ ڈائریکٹر مقرر، انجینئرنگ یونیورسٹی کیلئے کتنے روپے مختص کر دیے گئے؟ جانئے

اسلام آباد (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر فواد چوہدری نے کہا کہ وزیراعظم ہاؤس کو یونیورسٹی بنانے کے لیے پرجیکٹ ڈائریکٹر کی تقرری کر دی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ وزیراعظم ہاؤس کو یونیورسٹی بنانے کیلئے پروجیکٹ ڈائریکٹر کی تقرری کردی گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ

وزیراعظم عمران خان قوم سے کیا گیا وعدہ پورا کرنے کا عزم رکھتے ہیں۔بہت جلد وزیراعظم ہاؤس کو انجینئرنگ یونیورسٹی میں بدل دیا جائے گا۔ قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ یونیورسٹی قائم کرنے کیلئے منصوبہ بدستور قائم ہے۔وفاقی وزیر فواد چودھری نے کہا کہ پاکستان میں بین الاقوامی شہرت کے حامل سائنسدانوں کی تعداد 3639 ہے۔ان سائنسدانوں کا تعلق پاکستان کی پیداوار سے متعلق ہے۔ڈاکٹروں اور انجینئرز کی طرز پر سائنسدانوں کو رجسٹر کرنے کا منصوبہ زیرغور ہے۔گزشتہ سال سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کو بتایا گیا تھا کہ وزیر اعظم ہاؤس میں یونیورسٹی کے قیام کے معاملے پر تمام ابہام دور ہو گئے ہیں اور وہاں ہر صورت انجینئرنگ یونیورسٹی بنے گی جس کی لاگت پچپن ارب روپے آئے گی۔کمیٹی کو بتایا گیا تھا کہ اس ضمن میں سی ڈی اے نے رولز میں ترامیم

بھی کر لی ہیں اور زمین کا حصول بھی ہو گیا ، یونیورسٹی وزیر اعظم ہاؤس کے عقب میں بنے گی داخلی راستہ قائد اعظم یونیورسٹی کی طرف سے ہو گا۔واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے جنرل انتخابات میں کامیابی کے بعد قوم سے خطاب میں اعلان کیا تھا کہ وہ وزیراعظم ہاؤس کو انجینئرنگ یونیورسٹی بنائیں گے، تاہم اُن کی حکومت کا نصف حصہ گزر گیا ہے اور بھی تک اِس وعدے کو پورا نہیں کیا گیا۔ دوسری جانب وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ وزیراعظم نے جو وعدہ کیا ہے وہ پورا کرنے کا عزم رکھتے ہیں اور یونیورسٹی بنانے کے لیے 55 ارب روپے مختص کیے گئے ہیں اور بعد جلد وزیراعظم ہاؤس کو یونیورسٹی میں بدل دیا جائے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.