مکمل لاک ڈاؤن کا فیصلہ، یاسمین راشد کا اہم پیغام

ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ لاہور سمیت پنجاب کے آٹھ شہروں میں 15 دن کے مکمل لاک ڈاؤن کے لیے سفارشات کو حتمی شکل دے دی گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ لاہور میں کوویڈ پوزیٹیویشن کیسز کا تناسب تیزی سے بڑھ رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ لاہور میں کوویڈ پوزیٹیویشن کیسز کا تناسب 19 فیصد سے زیادہ ہے۔ اور پنجاب کی صورتحال دوسرے صوبوں سے مختلف ہے۔

وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے پیر کو متنبہ کیا ہے کہ اگر کورونا کی تیسری لہر کے درمیان اسٹینڈرڈ آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پیز) کی خلاف ورزی جاری رہی تو پنجاب میں مکمل لاک ڈاؤن نافذ کردیں گے۔
لاک ڈاؤن والے علاقوں میں اسپتال، طبی اسٹور 24/7 کھلے رہیں گے جبکہ لوگوں کو اشد ضرورت کی صورت میں صرف نقل مکانی کی اجازت ہوگی۔

جبکہ گوشت، دودھ، بیکریوں، پٹرول پمپ، گروسری، جنرل اسٹورز، عطائ چکی، پھل اور سبزیوں کی دکانیں صبح 9 بجے سے شام 7 بجے تک کھلی رہیں گی۔
گذشتہ ہفتے حکومت پنجاب نے رمضان کے دوران مساجد کے نفاذ کے لئے خصوصی ایس او پیز اور ہدایات جاری کی تھیں۔

نئے ایس او پیز کے مطابق مساجد یا امام بارگاہوں میں قالین نہیں پھیلایا جائے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.