مذہبی جماعت کے سربراہ کی فوری رہائی کا مطالبہ

تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ علامہ سعد رضوی کی گرفتاری پر ملک کے مختلف شہروں میں کارکنان کی بڑی تعداد میں سڑکوں پر آگئے ہیں اور مختلف مقامات پر دھرنے دیے جا رہے ہیں۔ جبکہ مشتعل کارکنان کی جانب سے مختلف علاقوں میں احتجاج کے باعث مارکیٹس

اور اطراف کی دکانیں بند کرادی گئیں۔
ٹاور پر مشتعل مظاہرین کی جانب سے پولیس پر پتھرائو سے دو اہلکار زخمی ہوگئے۔ تفصیلات کے مطابق تحریک لبیک پاکستان کے مرکزی امیر علامہ حافظ سعد حسین رضوی کی جانب سے تحریک تحفظ ختم نبوت کے تحت 20 اپریل کی ڈیڈ لائن کے حوالے سے لائحہ عمل کے اعلان اور لاہور میں گرفتاری کے بعد کراچی میں ان کے حامی احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پرآگئے اور شہرکے مختلف مقامات پردھرنے دیے،کراچی میں علامہ حافظ سعید حسین کی گرفتاری کے خلاف بلدیہ

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورتحال

مریض729,920اموات15,619صحت یاب638,267

زیر بحثرمضان المبارکپاکستان میں کرونا وائرس کی تیسری لہر
Pakistan پاکستان بمقابلہ South Africa جنوبی افریقہ – ہفتہ 10 اپریل

Pakistan پاکستان بمقابلہ South Africa جنوبی افریقہ – پیر 12 اپریل

علماء مشائخ کی تحریک لبیک کے سربراہ علامہ سعد رضوی کی گرفتاری کی شدید مذمت، رہائی کا مطالبہ
نالائق حکمرانوں کے فیصلے ملک کوانتشار کی طرف دھکیل رہے ہیں،علامہ رضوی کو رہا نہ کیا گیا تو ملک بھر کے علماء مشائخ احتجاج کی کال دیں گے، علماء مشائخ
Danish Ahmad Ansari دانش احمد انصاری منگل 13 اپریل 2021 03:59

علماء مشائخ کی تحریک لبیک کے سربراہ علامہ سعد رضوی کی گرفتاری کی شدید ..

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 اپریل2021ء) تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ علامہ سعد رضوی کی گرفتاری پر ملک کے مختلف شہروں میں کارکنان کی بڑی تعداد میں سڑکوں پر آگئے ہیں اور مختلف مقامات پر دھرنے دیے جا رہے ہیں۔ جبکہ مشتعل کارکنان کی جانب سے مختلف علاقوں میں احتجاج کے باعث مارکیٹس اور اطراف کی دکانیں بند کرادی گئیں۔
ٹاور پر مشتعل مظاہرین کی جانب سے پولیس پر پتھرائو سے دو اہلکار زخمی ہوگئے۔ تفصیلات کے مطابق تحریک لبیک پاکستان کے مرکزی امیر علامہ حافظ سعد حسین رضوی کی جانب سے تحریک تحفظ ختم نبوت کے تحت 20 اپریل کی ڈیڈ لائن کے حوالے سے لائحہ عمل کے اعلان اور لاہور میں گرفتاری کے بعد کراچی میں ان کے حامی احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پرآگئے اور شہرکے مختلف مقامات پردھرنے دیے،کراچی میں علامہ حافظ سعید حسین کی گرفتاری کے خلاف بلدیہ۔
(جاری ہے)

سائٹ ایریا۔حب ریور روڈ۔نارتھ کراچی۔نمائش۔ ملیر۔ کھوکھراپار اور علاقوں میں احتجاج کرتے ہوئے دھرنے دے دیئے جبکہ مشتعل کارکنان نے مختلف علاقوں میں مارکیٹس اور دکانیں بند کرادیں بعدازاں کارکنان کی جانب سے فرانس کے قونصل خانہ کے قریب کلفٹن،فرسیکو چوک، جامع کلاتھ ،ایئر پورٹ ،ناتھا خان،فائیو اسٹار چورنگی، کورنگی نمبر4، سہراب گوٹھ ، گورنر ہاوس ، فوارہ چوک ،پریس کلب ،ملیر،بن قاسم ٹاون میں احتجاج کیا گیا کراچی میں ٹاور کے مقام پرسڑک بلاک

کردی گئی جبکہ ملیر اسٹار گیٹ پر احتجاج کیا گیا۔
مذہبی جماعت کے امیر کی لاہورمیں گرفتاری کے بعد اورنگی ٹاون 5 نمبر کے چورنگی پر احتجاج کیا گیا کارکنوں نے اورنگی ٹاون 5 نمبر پر ٹائر جلا کراحتجاج کیا۔ جبکہ ٹاور پر مشتعل مظاہرین نے پولیس پر پتھرائو کردیا جس سے دو اہلکار زخمی ہوگئے تاہم پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے ہوائی فائرنگ وشیلنگ کردی جس سے علاقے میں بھگدڑ مچ گئی

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.