وزیراعظم نے دو ٹوک اعلان کردیا

دو ہفتوں کے لئے لاک ڈاؤن، وزیراعظم عمران خان نے دو ٹوک اعلان کردیا۔۔۔۔اسلام آباد(نیو زڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے

کہا ہے کہ سندھ حکومت نے دو ہفتوں کے لاک ڈاؤن کی تجویز دی لیکن ہم مکمل لاک ڈاؤن کے متحمل نہیں ہو سکتے۔ وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی رابطہ کمیٹی برائے کورونا کا اجلاس ہوا جس میں

ملک میں کورونا اور سیاسی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ وزیر اعظم عمران خان نے ایس او پیز پر ہر صورت عملدرآمد کی ہدایت کی۔ اس دوران وزیر اعظم عمران خان نے کہاکہ ہم مکمل لاک ڈاؤن کے متحمل نہیں ہوسکتے لہٰذا ایس او پیز میں غفلت نہ برتی جائے۔انہوں نے بتایا کہ سندھ حکومت نے

دو ہفتوں کے لاک ڈاؤن کی تجویز دی لیکن ہم مکمل لاک ڈاؤن نہیں کرسکتے، مکمل لاک ڈاؤن سے دیہاڑی دار طبقہ متاثر ہوگا۔ وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ اسمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی برقرار رہے گی، ہماری اسمارٹ لاک کی پالیسی پہلے بھی کامیاب رہی۔وزیراعظم کی زیرصدارت بھارت سے تجارت کے متعلق اجلاس ۔۔۔بھارت کے ساتھ تجارت بحال نہ کرنے کا  فیصلہ ۔ سابق سینیٹر و پاکستان رحمان ملک نے اس فیصلے کو خو ش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ عوام کی احساسات کو سمجھتے ہوئے وفاقی کابینہ کا بھارت سے چینی کی درآمد مسترد کرنا قابل ستائش ہے، وفاقی کابینہ اور وزیر اعظم کا شکریہ ادا کرتے ہیں جنہوں نے بھارت سے چینی کی درآمد کے فیصلے کو مسترد کرلیا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.