ہندوستان کے عالم دین کو خواب میں عمران خان سے متعلق کیا بشارت ملی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) ہندوستان کے ایک عالم دین کو خواب میں وزیراعظم عمران خان سے متعلق بشارت مل گیا۔تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہے جس میں ہندوستان کے ایک عالم دین کا کہنا ہے کہ میں دعا کرتا تھا کہ عمران خان پاکستان کے وزیراعظم بن جائیں۔اور میں دعا کیا کرتا تھا کہ یا اللہ عمران خان میں اتنا ٹیلنٹ ہے۔

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

تو اللہ کرے یہ وزیراعظم بن جائے۔ مجھے لگتا تھا کہ عمران خان میں اتنی صلاحیت ہے کہ یہ اس بکھرے ہوئے ملک کو جوڑ دیں گے۔وزیراعظم عمران خان کے ہمارے ملک کے کھلاڑیوں سے بہت اچھے تعلقات تھے۔ہم دیکھتے تھے کہ وہ ہمارے کھلاڑیوں سے گلے لگتے تھے اور خوب باتیں کرتے تھے تو ہم یہ بھی سوچتے تھے کہ اگر عمران خان وزیراعظم بن جائیں تو پاکستان کے ہندوستان سے تعلقات بہت اچھے ہو جائیں گے۔ کیونکہ ہمارے بھی خاندان کے

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

کئی لوگ اورعزیز و اقارب پاکستان میں ہیں لیکن اب تو وہ جیسے دشمن ملک بن گیا ہے،ایسا لگتا تھا کہ یہ لوگ اپنے پیاروں سے ملنے کے لیے ترس گئے ہیں۔جب دو ممالک کے اچھے تعلقات ہوں تو نہ صرف ان دو ممالک اور لوگوں کا بلکہ پوری دنیا کا فائدہ ہوتا ہے۔کئی بار مجھے عمران خان کے وزیراعظم بننے کئے لیے دعا کرنے کی توفیق ہوئی کیونکہ یہ دونوں ملکوں کے لیے بہت خیر کی بات ہونی تھی۔ لیکن یہ بات بہت پرانی ہو گئی تھی۔ عالم دین کا مزید کہنا تھا کہ جب میں اس بار حج ادا کرنے آیا تو منیٰ میں جانے سے پہلے میں نے دو تین رات لگاتار عمران خان کو خواب میں دیکھا۔پہلے دن یہ خواب دیکھا کہ الیکشن ہو گئے ہیں نتیجہ آنے والا ہے اور کچھ لوگ انہیں میرے پاس دعا کے لیے لائے ہیں۔

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

میں نے دیکھا عمران خان بہت تواضع کے ساتھ پٹھانی سوٹ پہنے میرے ساتھ برابر میں بیٹھے ہوئے ہیں اور مجھے کہتے ہیں کہ میری پاکستان بننے کی حق ادا کرنے کی نیت ہے۔ عالم دین کا کہنا تھا کہ مجھے دو تین راتیں یہی خواب آتا رہا۔اور پھر جب ہم منیٰ گئے تو میرے خواب میں حضرت محمدﷺ تشریف لائے اور کہا کہ آب تو خوش ہو نہ تم دعا کیا کرتے تھے کہ اللہ عمران خان وزیراعظم پاکستان بن جائے۔ دوسری جانب معروف مذہبی سکالر و نامور عالم دین مولانا طارق جمیل کا کہنا ہے کہ مجھ پر ہر طرف سے کافی لعن طعن کی جا رہی ہے کہ میں وزیر اعظم عمران خاں کی تعریف کرتا ہوں آپ دوسروں کی تعریف کیوں نہیں کرتے یہ مولوی ایسا ہے ویسا ہے میرا ان لوگوں سے ایک ہی سوال ہے۔ کہ کیا کسی

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

اور نے بھی ریاست مدینہ کی کبھی بات کی ہے؟ نیچے آپ ویڈیو دیکھ سکتے ہین ممکن ہے عمران خان ریاست مدینہ میں ناکام ہوجائے لیکن انہوں نے الفاظ تو ادا کیے، ارادہ تو کیا کہ پاکستان کو ریاست مدینہ طرز کی ریاست بنا نا چاہتے ہیں، میں نے اس لیے عمران خان کی تعریف کی، لیکن اس پر بھی مجھے وہ گالیاں دی جار ہی ہیں۔مولانا طارق جمیل کا کہنا تھا کہ ہمارے پاکستانی بھی عجیب بادشاہ لوگ ہیں، کبھی گدھے کو گھوڑا بنا دیتے ہیں، کبھی گھوڑے کو خچر بنا دیتے ہیں، لیکن میں ابھی بھی اپنی بات پر قائم ہوں۔ اب ہندوستانی عالم دین والی نیچے ویڈیو دیکھئے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.