بس کچھ ہی لمحے باقی رہ گئے پاکستان میں کیا تباہی پھر والی ہے ؟ ہنگامی الرٹ جاری کر دیا گیا

انتباہ! گرج چمک کے طوفان

ڈی جی خان، راجنپور اور کیرتھر کے پہاڑی سلسلوں پر بن چکے ہیں اور تیزی سے جنوب کی جانب بڑھ رہے ہیں۔ اب سے اگلے 2 گھنٹوں کے دوران بارکھان اور ڈی جی خان اور راجنپور کے پہاڑوں پر گرج چمک کیساتھ موٹے حجم کی ژالہباری اور

تیز بارش کا امکان ہے ۔جبکہ راجنپور کے میدانی علاقوں اور رحیم یار خان میں مٹّی کے طاقتور طوفان کیساتھ کہیں کہیں معتدل سے تیز بارش اور ژالہ باری ہو سکتی ہے۔آندھی کی رفتار 80 سے 100 کلومیٹر فی گھنٹہ متوقع ہے۔ لہٰذا علاقہ مکین طوفان کے دوران گھروں میں محفوظ رہیں۔ اس ہی طرح

گرج چمک کے طوفان کیرتھر کے پہاڑوں پر بن کر جنوب کی سمت میں بڑھ رہے ہیں، جس سے لسبیلہ اور اوران کے علاقوں میں 70 سے 90 کلومیٹر فی گھنٹہ کی آندھی کیساتھ معتدل سے تیز بارش اور بعض مقامات پر

ژالہ باری کا امکان ہے۔خوفناک پیش گوئیاں کی تھیں جن میں تیسری عالمی جنگ چھڑنا اور تباہ کن زلزلوں کا آنا شامل ہیں۔ اور نوسٹراڈیمس کی پیش گوئیوں کے مطابق اس دنیاکا خاتمہ 3793ءمیں ہو گا۔ اور یہ ہماری اس دنیا کا آخری سال ہو گا۔ نوسٹراڈیمس کا کہنا تھا کہ

”اس سال آخری آتشزدگی (FinalConflagration)ہو گی اور یہ دنیا ختم ہو جائے گی اور ۔نوسٹراڈیمس کی پیش گوئیوں کے برطانوی ماہر بوبی شیلر کا کہنا ہے کہ ”نوسٹراڈیمس نے آئندہ سالوں میں شمسی طوفان کی پیش گوئی بھی کر رکھی ہے، اور جو ہماری زمین کے برقی نظام کو

تباہ و برباد کر دے گا اور دنیا کا کمیونی کیشن کا تمام تر نظام ناکارہ ہو جائے گا۔ اور بجلی بند ہو جائے گی اور بیشتر دنیا تاریکی میں ڈوب جائے گی۔اس کے علاوہ نوسٹراڈیمس نے یہ پیش گوئی بھی کی ہے ییلو سٹون نیشنل پارک میں آتش فشاں پھٹے گا جو بڑے پیمانے پر تباہی کا سبب بنے گا۔“

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *