کیا آپ کا بھی بجلی کا بل زیادہ آرہا ہے؟ تو کم کرنے کے لئے یہ 5 طریقے اپنائیں اور بجلی کا بل بچائیں

آپ کمرے سے باہر آتے وقت لائٹس بند کردیتے ہیں، جب استعمال نہ ہورہی ہوں تو چھوٹی

برقی مصنوعات کو ان پلگ کر دیتے ہیں اور آپ یہ سمجھتے ہیں کہ بجلی کے بل کی کافی بچت ہورہی ہے مگر پھر بھی ہر ماہ بل تیزی سے اوپر جارہا ہے لیکن ایسا کیوں؟

ہم آپ کو 5 آسان طریقوں کے بتائیں گے جن پر عمل کر کے آپ اپنے بل میں نمایاں کمی لانے میں کامیاب ہوجائیں گے اور سب سے اچھی باتیہ ہے کہ اس میں زیادہ محنت بھی نہیں کرنی پڑے گی۔سب سے زیادہ بجلی خرچ

کرنے والی اشیاء کی شناختاکثر برقی مصنوعات بند ہونے کے بعد بھی بجلی کا استعمال جاری رکھتے ہیں خاص طور پر جن کو چلانے کے لیے ریموٹ کنٹرول کا استعمال ہوتا ہے، تو اپنے ٹی وی کو ریموٹ سے بند کر دینا ہی

کافی نہیں ہوتا، اس طرح بند ٹی وی سالانہ سینکڑوں کلو واٹ بجلی کھینچ لیتا ہے اور بل میںاضافی رقم آپ کو سر پکڑنے پر مجبور کردیتی ہے۔ تو ٹیلی وژن کو ہمیشہ سوئچ سے بند کریں۔بجلی کو استعمال کرنے کا دورانیہ

پاکستان میں بجلی کے یونٹ کی قیمت دن میں کچھ اور رات میں مختلف ہوتی ہے، یعنی زیادہ لوڈ والے اوقات میں بجلی مہنگی اور کم لوڈ والے وقت میں نسبتاً سستی ہوجاتی ہے، تو اپنی زیادہ بجلی کھینچنے والی ڈیوائسز کا استعمال

اگر کم لوڈ والے اوقات میں کریں تو آپ بغیرکسی زحمت کے ہر ماہ کچھ حد تک بجلی کے بل میں بچت لا سکتے ہیں۔ایل ای ڈی بلب کو ترجیح دیںیقیناً ایک عام بلب کی جگہ ایل ای ڈی بلب مہنگا ہوتا ہے مگر یہ پرانے

کے مقابلے میں بجلی کی بچت کرتا ہے جو بہت سے لوگ نہیں جانتے۔ اگر عام بلب ماہانہ بھر میں ایک ہزار روپے کی بجلی خرچ کرتا ہے تو ایل ای ڈی میں یہ اوسط تین سے چار سو روپے خرچ ہوگی یعنی چھ سو فیصد بچت۔برقیآلات کو ان پلگ کرنالیپ ٹاپ کیبلز وغیرہ کو

متعدد افراد پلگ میں لگا کر چھوڑ دیتے ہیں اور سوئچ بھی بند کرنے کا نہیں سوچتے۔ اگرچہ آج کے دور کے چارجر بہت کم مقدار میں توانائی خرچ کرتے ہیں تاہم ماہرین وارننگ دیتے ہیں کہ اس حوالے سے مسلسل غفلت بجلی کے بھاری بل کی شکل میں سامنے آتی ہے۔ ماہرین کے مطابق دیوار پر لگے کسی بھی چارجر کا سوئچ بند نہ کیا جائے تو وہ کچھ مقدار

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *