آئندہ 3 روزکےدوران طوفانی بارشوں کی پیش گوئی‎

لاہور)ملک بھر میں طوفانی بارشوں کا نیا سلسلہ، محکمہ موسمیات نے

بدھ تک طوفانی بارشوں کی پیش گوئی کردی ۔ راولپنڈی، کراچی، حیدرآباد، ٹھٹہ، گوجرانوالہ اور پشاور کے ندی نالوں میں طغیانی کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔صوبہ پنجاب میں بارشوں کے اسپیل میںشدت آگئی، جس کے باعث سیلاب کا خدشہ ظاہر کردیا گیا۔ محکمہ موسمیات کیمطابق آ ج سے ملک کے شمالی حصوں میں

مون سون کی شدت میں اضافہدیکھا جائے گا اور 10جولائی سے 14جولائی تک پنجاب کے بیشتر اضلاع میں دن اور رات کے اوقات میں گرج چمک کے ساتھ طوفانی بارشوں کا سلسلہ جاری رہے گا۔بتایا گیا ہے کہ پنجاب کے اضلاع راولپنڈی، اٹک،چکوال، جہلم،

گجرات، منڈی بہاوالدین، سیالکوٹ، گجرانوالہ، حافظ آباد اور لاہور سمیت شیخوپورہ، قصور، اوکاڑہ، فیصل آ باد، جھنگ، ٹوبہ ٹیک سنگھ، خوشاب، سرگودہا، میانوالی، بھکر اور لیہ میں 10 سے 14 جولائی تک تیز بارشوں کا امکان ہے۔ پنجاب ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے ترجمان نے کہا ہے کہ مون سون بارشیں پہاڑی علاقوں میں

سیلابی ریلوں اور لینڈ سلائیڈنگ کا سبب بن سکتیں ہیں جب کہ لاہور، راولپنڈی، گجرانوالہ اور فیصل آ باد میں 12سے 14جولائی کے دوران تیز بارش کے سبب شہری سیلاب کے خطرات ہیں، تمام متعلقہ اداروں کو الرٹ رہنے اور حفاظتی انتظامات کی ہدایات جاری کی جا چکی ہیں جب کہ عوام وہ بارش کے دوران

گھر وں کے اندر اور باہر احتیاط برتیں، برقیتنصیبات اور خستہ حال عمارات سے مناسب فاصلہ رکھیں۔یا د رہے کہ گزشتہ دنوں کے دوران اسلام آباد، پنجاب، بالائی خیبر پختونخوا، شمال مشرقی بلوچستان، کشمیر اور گلگت بلتستان میں تیز ہواوں اور گرج چمک کے ساتھ بارش ہوئی جب کہ گزشتہ سال کراچی اور صوبہ سندھ میں

مون سون کی ریکارڈ بارشیں ہوئی تھیں لیکن لاہور اور پنجاب میں مون سون سیزن کے دوران ہونے والی بارشیں معمول سے کم رہی تھیں تاہم رواں سال مون سون سیزن کے دوران پنجاب میں بھی معمول سے زیادہ بارشیں

ہونے کا امکان ہے، توقع سے زائد بارشوں کا امکان ہونے کی وجہ سے لاہور سمیت پنجاب کے بڑے شہروں میں متعلقہ ادارے پہلے ہی الرٹ ہو چکے، نکاسی آب کی صورتحال بہتر بنانے کیلئے بھی اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.