سرکاری ہو یا غیر سرکاری سب کو 20 ہزار ملازمین کیلئے خوشخبری، نوٹیفیکیشن جاری

وفاقی حکومت کی جانب سے ملک میں

کم سے کم اجرت 20ہزارروپے ماہانہ ادائیگی کانوٹیفکیشن جاری کردیاگیا۔ملک میں رائج کم سے کم اجرت کے قانون 1961کے ترمیمی آرڈیننس 1980کے آرٹیکل 2کے تحت روزانہ 8گھنٹے فرائض سرانجام دینے والے عارضی ،ڈیلی ویجز اورکنٹریکٹ ملازمین

کو20ہزارروپے ماہانہ اداکرنالازمی قراردیاگیاہے ۔دریں اثنابلوچستان لیبرفیڈریشن کے صدر خان زمان چیئرمین بشیر احمد سیکرٹری جنرلقاسم خان عبدالمعروف آزاد حاجی ،عزیز شاہوانی ،عابد بٹ نورالدین بگٹی محمد عمرسمیت دیگرمزدور رہنمائوں نے بلوچستان حکومت سے مطالبہ کیاہے کہ صوبے کے تمام اداروں اورصنعتی

کارکنوں کے لیے کم سے کم اجرت بیس ہزار روپے اجرت دینے کانوٹیفکیشن جاری
وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو ارسال کر دی، جیل پولیس اور جیل ملازمین کو ایک بنیادی تنخواہ ڈبل ملے گی، اس فیصلے سے جیل پولیس کی تنخواہپنجاب

پولیس کے برابر ہو جائے گی۔جیل پولیس کی تنخواہ بڑھانے کی سمری محکمہ خزانہ پہنچ گئی، محکمہ خزانہ اگلے چند روز میںسمری کو کلیئر کرے گا، اس فیصلے سے محکمہ خزانہ کو کروڑوں روپے کا اضافی

بوجھ اٹھانا پڑے گا۔ حکومت پنجاب نے جیل پولیس اور ملازمین کی تنخواہ ڈبل کرنے کا فیصلہ کر لیا۔محکمہ داخلہ پنجاب نے سمری وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو ارسال کر دی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *