ایٹم بم سے زیادہ خطرناک بم کی تیاری ۔۔۔!!!پاکستان اور ترکی مل کر ایساکیا کرنے جا رہے ہیں جس سے پوری دنیاان کے قدموں کے نیچے ہو گی؟ بڑی بڑی سپر پاورز کے پسینے چھڑا دینے والی خبر

لاہور….)کُرہ ارض کے چوہدری اور وڈیرے مطمئن تھے کہ منصوبہ بندی کے عین مطابق

ان کی تہذیبی یلغارمسلم اقدار کو تہس نہس کر رہی ہے۔ مسلم ممالک کے نوجوان امریکا اور یورپ کی فلموں کے دلدادہ اور اسی تہذیب کے پرستار بن چکے ہیں۔وہ خوش تھے کہ’’ ہمارے فنڈز سے بنائے گئے ڈراموں نے ان کیہوجائیں گے۔ ورلڈ بینک اور آئی ایم ایف کے ڈیٹا کے مطابق یہ ایشیائی ممالک معاشی ترقی میں کئی یورپی ممالک کو پیچھے چھوڑ دیں گے اور چین امریکا کو

پیچھے چھوڑ کر اس فہرست میں پہلے نمبر پر ہوگا۔اعدادو شمار میں کہا گیا ہے کہ 1990 سے چین کی معاشی نمو بہت تیز ہے اور توقع ہے کہ 2024 تک چین بڑی معیشتوں کی فہرست میں پہلے نمبر پر ہوگا۔مکینیکل کمپلیکس کی بحالی کے لئے اہم قدم اٹھاتے ہوئے ایچ ایم سی ٹیکسلا اور چینی کمپنیوں کے درمیان

معاہدہ ہوگیا، معاہدے پر دستخط کی تقریب ہوئی، معاون خصوصی اطلاعات عاصم سلیم باجوہ تقریب کےمہمان خصوصی تھے جبکہ پاکستان میں چین کےسفیرژاوجنگ بھی تقریب میں موجود تھے اور چین میں پاکستان کی سفیر ویڈیولنک کے ذریعے بیجنگ سے تقریب میں شریک ہوئے۔ چیئرمین سی پیک عاصم سلیم باجوہ اور

چیئرمین اٹامک انرجی کمیشن کی موجودگی میں دستخط ہوئے، ایم ڈی ایچ ایم سی نےچینی نیشنل الیکٹرک کمپنی ، چائنا کنسٹرکشن کمپنی،شنگ لنگ ایکسپورٹ کمپنی ودیگرکمپنیوں سے معاہدے پر دستخط کئے، جس سے توانائی،گھروں کی تعمیر،برآمدات کےفروغ،باہمی تجربات کاتبادلہ کیا جائے گا۔ اس موقع چینی سفیر نے کہا ایچ ایم سی، چینی کمپنیوں میں

بزنس تعاون پاک چین دوستی کا نیا باب ہے، معاہدے سے باہمی اقتصادی تعاون کو مزید فروغ اور استحکام ملے گا، دونوں ممالک کے مابین تجارتی تعاون کے بے پناہ مواقع ہیں۔ چینی سفیر کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کی دوستی اورتعاون 7 دہائیوں پر محیط ہے،سی پیک باہمی تعاون کو نئی جہت تک لے جارہا ہے، پہلے مرحلے میں متعدد انفرا اسٹرکچر کے منصوبوں پر توجہ دی گئی، اب دوسراتاریخی

مرحلہ شروع ہوچکا ہے، جو نئی راہیں کھولے گا۔ انھوں نے مزید کہا چین 4دہائیوں سے مینوفیکچرنگ کی بنیاد پر اقتصادی ترقی کی راہیں طے کررہا، زیادہ سے زیادہ مصنوعات کی تیاری کی صلاحیت نے صورتحال بدل دی، سی پیک خطے میں ترقی اوراستحکام کی نئی داستانیں رقم کرے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *